23:51:21
بہار: 16 اگست تک لاک ڈاؤن میں توسیع ، حکومت اور پرائیوٹ دفاتر کو 50 فیصد حاضری کے ساتھ کام کرنے کی اجازت
 77
31 Jul, 2020 12:00 pm

ریاست بہار میں ایک مہینے میں کووڈ معاملات کی تعداد میں تقریبا پانچ گناہ اضافے کے درمیان ، بہار کی حکومت نے جمعرات کو ریاست میں لاک ڈاون میں 16 اگست تک توسیع کرنے کا فیصلہ کیا - لاک ڈاؤن 16 جولائی کو شروع ہوا تھا اور اس کا اختتام 31 جولائی کو ہونا تھا۔ یکم اگست سے نافذ ہونے والی نئی پابندیوں کے ایک حصے کے طور پر ، سرکاری اور نجی دفاتر کو پچاس فیصد افرادی قوت کے ساتھ کام کرنے کی اجازت ہوگی جبکہ موجودہ لاک ڈاؤن کے تحت سرکاری اور نجی دفاتر کی کل بندش 31 جولائی تک ہوگی۔
ہوائی اور ریلوے کی خدمات معمول کے مطابق جاری رہیں گی جبکہ پبلک ٹرانسپورٹ نہیں چلیں گے ، سوائے ٹیکسیوں اور آٹو رکشہوں کے۔ نجی گاڑیوں کو بغیر کسی پاس کے جانے کی اجازت ہوگی۔ کووڈ کے معاملات یکم جولائی کو 10،205 سے بڑھ کر 30 جولائی کو 48،001 ہوچکے ہیں ، جبکہ کل 285اموات میں سے 203گذشتہ 28 دنوں میں درج ہوئی ہیں۔ 
ریاست میں کووڈ ۔19 کی موجودہ صورتحال کے پیش نظر ، مزید پابندیاں عائد کرنے کے بعد مندرجہ ذیل رہنما خطوط جاری کی جارہی ہیں… ”خصوصی سکریٹری (ہوم) سنیل کمار نے ایک حکم جاری کرتے ہوئے مزید کہا کہ" رات کا کرفیو رات 10 بجے سے 5 بجے تک ہوگا۔ سوائے ضروری خدمات اور تجارتی سرگرمیوں کے۔ ریستوراں ، ڈھابوں اور کھانے پینے والی جگہوں کو صرف ہوم ڈلیوری اور خدمات کے لئے کام کرنے کی اجازت ہوگی۔ شاپنگ مالز کے علاوہ تمام تجارتی اور نجی اداروں کو عام طور پر کام کرنے کی اجازت ہوگی۔ ڈیفنس ، سنٹرل آرمڈ پولیس فورسز ، خزانے ، عوامی افادیت ، ڈیزاسٹر مینجمنٹ ، ایل پی جی ، پی این جی ، بجلی کی پیداوار اور ٹرانسمیشن آفس پوری حاضری کے ساتھ کام کر سکتے ہیں۔

 

Original text