Epaper Editions
تین ہوائی اڈّے اڈانی گروپ کے حوالے

 17
15 Feb, 2020 12:27 pm

 

نئی دہلی:بندرگاہوں سے لے کر خوردنی تیل کے کاروبار میں سرگرم گوتم اڈانی کے سربراہی ولے اڈانی گروپ نے ایئر پورٹ اتھارٹی آف انڈیا کی 6میں سے 5 ایئرپورٹ کی بولی اپنے نام کرلی ہے۔فی الحال3ایئرپورٹ کی ذمہ داری گروپ نے سنبھال لی ہے۔ باقی 2ہوائی اڈوں کی ذمہ داری سنبھالنے کےلئے معاہدہ ہونا باقی ہے۔ اس کاروبار کےلئے کل 10کمپنیوں نے 32بولی لگائی تھی۔ پچھلے سال نومبر میں ہی سرکار نے اس تجویز کو منظوری دی تھی، جس میں ایئرپورٹ اتھارٹی آف انڈیا کے تحت آنے والے 6ایئرپورٹ کو پبلک پرائیویٹ پارٹنر شپ کی بنیاد پر نیلام کرنے کا منصوبہ بنایاگیاتھا۔اڈانی گروپ پچھلے کچھ عرصے سے شہری ہوابازی سیکٹر اور ایئرپورٹ بزنس میں قدم رکھنے کی کوشش کررہا تھا۔ اب اسے کامیابی ملی ہے۔
اطلاعات کے مطابق احمد آباد، لکھنؤ او ر منگلورو ہوائی اڈوں کی دیکھ بھال کا اختیار 50 سال کےلئے اڈانی گروپ کو مل گیا ہے۔ایئر پورٹ اتھارٹی آف انڈیا (اے اے آئی) نے آج بتایا کہ اڈانی گروپ کی اکائیوں کے ساتھ تینوں ہوائی اڈوں کےلئے آج کانسیشن معاہدے پر دستخط کئے گئے۔ ان ہوائی اڈوں کی دیکھ بھال پبلک پرائیویٹ پارٹنرشپ کی بنیاد پر کی جائے گی۔ اڈانی گرو پ کے پاس ہوائی اڈوں کی دیکھ بھال، مینجمنٹ اور ڈیولپمنٹ کا اختیار ہوگا۔ ان ہوائی اڈوں سے حاصل آمدنی پر کمپنی کا اختیار ہوگا۔اڈانی گروپ نے پہلی مرتبہ ہوائی اڈہ کے کاروبار میں قدم رکھا ہے ۔ اس نے بتایا کہ اس کی اکائیاں اڈانی لکھنؤ ہوائی اڈہ لمیٹڈ، اڈانی احمدآباد بین الاقوامی ہوائی اڈہ لمیٹڈ اور اڈانی منگلورو ہوائی اڈہ لمیٹڈ نے تینوں ہوائی اڈوں کے لیے متعلقہ الگ الگ معاہدوں پر دستخط کئے ۔ یہ معاہدے پچاس سال کےلئے کئے گئے ہیں۔اے اے آئی نے گزشتہ برس 6 ہوائی اڈوں کی دیکھ بھال پبلک پرائیوٹ پارٹنرشپ کے تحت پرائیوٹ کمپنیوں کو سونپنے کے لیے ٹنڈر جاری کیا تھا۔ اس میں احمد آباد،لکھنؤ اور منگلورو کے علاوہ جے پور، گوہاٹی اور تریوندرم ہوائی اڈے شامل تھے ۔تمام 6ہوائی اڈوں کےلئے اڈانی گروپ نے کامیاب بولی لگائی تھی۔ ان میں 3 ہوائی اڈوں کےلئے آج معاہدوں پر دستخط ہوئے۔ اے اے آئی نے بتایا کہ دیکھ بھال کے حق کے بدلے اڈانی گروپ سے اسے یک مشت رقم ملے گی اس کا استعمال پرانے ہوائی اڈوں کی دیکھ بھال اور ڈیولپمنٹ اور نئے ہوائی اڈے بنانے کےلئے کیا جائے گا۔
 

Original text