Epaper Editions
ٹیم انڈیا کی شکست، میزبان ٹیم کے کے ذریعہ شکست فاش کا سامنا
 35
12 Feb, 2020 04:18 pm

 

نئی دہلی:لوکیش راہل (112) کی شاندار سنچری بھی ہندستان کو تیسرے اور آخری ون ڈے میں منگل کو شکست سے نہیں بچا سکی اور میزبان نیوزی لینڈ نے اوپنر ہنری نکولس (80)، مارٹن گپٹل (66) اور کولن ڈی گرینڈہوم (ناٹ آؤٹ 58) کی نصف سنچریوں کی بدولت اپنا مقابلہ پانچ وکٹ سے جیت کر تین میچوں کی سیریز کو 3-0 سے کلین سویپ کر لیا۔ نیوزی لینڈ نے اس کلین سویپ سے ہندستان سے ٹی -20 سیریز میں ملی 0-5 کی کلین سویپ کا بدلہ چکا دیا۔ اس سے قبل ہندوستان نے پہلے بلے بازی کرتے ہوئے50 اوور میں7وکٹ پر296 رن کا مضبوط اسکور بنایا لیکن فارم میں چل رہے کیوی بلے بازوں کے سامنے یہ اسکور بھی چھوٹا ثابت ہوا۔ میزبان ٹیم نے 47.1اوور میں پانچ وکٹ پر 300 رن بنا کر یکطرفہ کامیابی حاصل کر لی۔ٹی -20 اور ون ڈے سیریز ختم ہونے کے بعد دونوں ٹیمیں اب 21 فروری سے شروع ہونے والی دو ٹسٹ میچوں کی سیریز میں اترے گی۔ پہلا ٹسٹ 21 فروری سے ویلنگٹن میں اور دوسرا ٹیسٹ 29 فروری سے کرائسٹ چرچ میں کھیلا جائے گا۔ ہندوستان پہلی بار نیوزی لینڈ سے 0-3 سے ہارا ہے ۔ ہندوستان کے لئے یہ ہار اس لئے شرمناک رہی کیونکہ اس نے ٹی -20 سیریز 5-0 سے جیتی تھی اور اس ون ڈے سیریز میں جیت کا مضبوط دعویدار مانا جا رہا تھا۔ اس سیریز میں ہندوستان کی سب سے بڑی کمزوری اس کی بالنگ رہی اور اس کے نمبر ایک ون ڈے بالر جسپریت بمراہ کو مکمل سیریز میں ایک بھی وکٹ نہیں ملا۔ بمراہ نے اس میچ میں10 اوور میں50 رنز دیے اور خالی ہاتھ رہے ۔تیز گیند باز نودیپ سینی آٹھ اوور میں68 رن لٹاکر کوئی وکٹ نہیں لے پائے ۔ شاردل ٹھاکر نے 9.1اوور میں87 رنز لٹاکر محض ایک وکٹ لیا۔ لیگ اسپنر یجویندر چہل10 اوور میں47 رن پر تین وکٹ لے کر سب سے کامیاب رہے ۔ لیفٹ آرم اسپنر رویندر جڈیجہ نے 10 اوور میں 45 رن پر ایک وکٹ لیا۔ بڑے ہدف کا تعاقب کرتے ہوئے گپٹل اور نکولس نے پہلے وکٹ کے لئے16.3 اوور میں106 رن جوڑ کر میزبان کو ٹھوس بنیاد دی۔ گپٹل نے46 گیندوں پر66 رنز کی دھماکہ خیز اننگز میں چھ چوکے اور چار چھکے لگائے ۔ کپتان کین ولیم کندھے کی چوٹ کی وجہ سے پہلے دو میچوں میں باہر رہے تھے لیکن اس میچ میں لوٹ کر انہوں نے 31 گیندوں میں دو چوکوں کی مدد سے 22 رنز بنائے۔ چہل نے گپٹل کو بولڈ کر ہندستان کو پہلی کامیابی دلائی۔ چہل نے پھر ولیمسن کو مینک اگروال کو ہاتھوں کیچ کراکر دوسرا وکٹ لیا۔ ہندوستان کے لئے اب تک سر درد رہے راس ٹیلر کو جڈیجہ نے کپتان وراٹ کوہلی کے ہاتھوں کیچ کرا دیا۔ ٹیلر نے 18 گیندوں پر 12 رنز بنائے ۔ٹھاکر نے نکولس کو وکٹ کے پیچھے راہل کے ہاتھوں کیچ کرایا۔ نکولس نے 103 گیندوں پر نو چوکوں کی مدد سے 80 رنز بنائے۔ نیوزی لینڈ کا چوتھا وکٹ189کے اسکور پر گرا۔ اس وقت ہندوستان کو جیت کی امید نظر آنے لگی تھی۔ جیمز نیشام25 گیندوں میں19 رنز بنا کر چہل کا تیسرا شکار بنے اور ان کا وکٹ40 ویں اوور میں 220کے اسکور پر گرا۔ لیکن ٹام لاتھم اور گرینڈہوم نے چھٹے وکٹ کے لئے80 رن کی ناٹ آؤٹ ساجھے داری کرکے17 گیند باقی رہتے ہی میچ ختم کر دیا۔گرینڈہوم نے 28گیندوں پر چھ چوکے اور تین چھکے اڑاتے ہوئے ناقابل شکست58 رنز بنائے جبکہ لاتھم نے34 گیندوں پر تین چوکوں کے سہارے ناٹ آؤٹ32 رنز بنائے۔ نکولس کو پلیئر آف دی میچ اور ٹیلر کو پلیئر آف دی سیریز ملا۔

Original text